ا

khwab ki tabeer khwab men Anaar dekhna

khwab ki tabeer khwab men Anaar dekhna

khwab ki tabeer khwab men Anaar dekhna

khwab ki tabeer Anaar dekhna khwab ki tabeer khwab men Anaar dekhna anaar2-2

hazrat daniyaalne farmaya anaar ki assal khawab me maal he lekin mard ki himmat par he kas kar k wo wakat par khaya ho ya na wakt par khaya ho agar dekhe k anaar darakht se utara or khaya he to daleel he ba jamaal ( khubsurat) aorat se nafaa paega hazrat ibne sirin ne farmaya khawab me anaar shirin maal ka jama hona he zbaaz ehle tabeer ne bataya kkhawab me shirin 1 anaar khana 1 hazaar dirham he jo wo paega anaar e tursh gham o andhow he jis aaar ka tursh ya shirin hona nahi janta to uski tabeer shirin anaar jesi he azrat jabir ne farmaya agar koi shakhas dekhe k anaare shiri usk maosam me khaya he to wo hazaar dirham ya kam az kam 50 dirham paega ya mumkin he dirham ki jaga denaar pae ga tabeer biyaan karne wale ko chahiye k sahib e khawab ki himmat o kadar k mutabik tabeerbiyaan kare azrat jafar sadiq ne farmaya khawab me anaar 3 waja par he

1maal jama karna

2zane parsa

3shaher abaad hoga lekin tursh anaar khana gham opar daleel

heazrat ismael ne farmaya badshah dekhe k usk pas anaar he to daleel he shaher ya walayat paega yahi haal raees ka he tajir ko 10 hazaar dirham bazari ko 1 hazaar dirham darwesh ko 10 ya 1 dirhammile ga

      anaar)
1agar anaar metha ho to khawab me iski tabeer jama shuda maal he

2or kabhi ye aorat par bhi dalallat karta he 3kabhi abaad ilake par bhi anaar maal or larke par bhi dalallat karta he aese hi iski tabeer 1000 100 ya 10 dirhamon se bhi li jati he

3baaz e kaha dekhne wale ki halat k mutabik badshah k liye anaar dekhna shehar se tabeer kiya jae ga agar wo use tor de to daleel he wo shaher ko fatah kare ga uska chilka shaher ki dewaron par dalallat karta isk daane shaher k log hen us me maojud jhalliyan uska maal hai

4agar kisi ne khawab me anaar ka chilka khaya ho to daleel he bimari se thek hoga anaar ki tabeer band sanduk se bhi ki jati he kabhi ye shahed ki makhiyun k chhatte par bhi dalallat karti he

5agar anaar k daane sufaid hon to ye diraaham agar surkh hen to dinaneer par dlallat karta he

6baaz ne kaha anaar ghabrahat or safar par bhi dalallat karta he agar iski tabeer aorat se ki jae to wo bahut khubsurat hogi agar anaar sahi ho to bakirdaar hogi agar tota hua ho to seeba hogi

7sahi anaar se murad aorat hoti he khatta anaar haraam maal he baaz ne kaha is se muraad gham o pareshani he
8agar kisi ne anaar becha to us ne duniya ko akhrat k mukable me khareed liya hoga
9anaar ko nachorna uska ras peena admi ka apne upar kharch karna he

10aesa anaar jisek khatte methe ka ilm na uski tabeer methe anaar me shumar hogi aanaar ka darakht ayaal daar shan o shaokat wale admi par dalallat karta he

11badshah darakhat dekhe to wo dusre badshah par ghalib hoga

12agar tajir he to wo gunahon o buraiyun se bachta hoga uski tijarat barhe gi

13anaar k darakhat ka katna katta rehmi ( rishte dari khatam karna) par dalallat karta he
14metha anaar wo halaal rizq se jo mehnat se hasil hota he 15khatta metha anaar us maal se he jis k halaal o haraam hoe ka ilm he\

اچھا خواب نعمتِ خدا وندی

حضورﷺ نے ارشاد فرمایا ” بشارتوں کے سوا کوئی چیز باقی نہیں رہی ۔ صحابہ نے عرض کیا ےیا رسولاللہ بشارتوں سے کیا مراد ہے آپ نے فرمایا سچا خواب ۔(صحیح بخاری عن ابی ھریرہ) بخاری ومسلم کی متفق علیہ حدیث ہے آنحضرت ﷺ نے ارشاد فرمایا کہ سچا خواب نبوت کا چھیاسواں حصہ ہے ۔

اس حدیث شریف معلوم ہوا کہ سچا خواب رویائے صالحہ علوم نبوت کا ایک جزو ہے اور علم نبوت باقی ہے گو انبیاءکرام کی آمد کا سلسلہ موقوف ہوچکا دوسرے لفظوں میں سچا خواب علوم نبوی کا عکس ہے۔

خواب کی اقسام

امام محمد بن سیرین ارشاد فرماتے ہیں کہ خواب تین قسم کے ہوتے ہیں ۔

1- مبشرات خداوندی –

2- تخویفِ شیطان) شیطان کے زیرِ اثر ) –

3- حدیثِ نفس یعنی ذہنی اور دماغی خیلات کا عکس –

اس تقسیم سے ظاہر ہوتا ہے کہ خواب کے تمام اقسام صحیح قابلِ تعبیر اوردر خوراعتناء نہیں ہوتے تعبیر اور اعتبار کے لائق وہی خواب ہوتے ہیں جو حق تعالیٰ کی طرف سے بشارت اور اعلام پر مبنی ہوں۔

علم تعبیر کے چھ مشہور امام
-علم تعبیر میں درج ذیل چھ آئمہ کرام کے اقوال کے بطور سند پیش کیا جاتا ہے
حضرت دانیال علیہ اسلام
حضرت امام جعفر صادق رضی اللہ تعالیٰ علیہ
حضرت امام محمد بن سرین رحمتہ اللہ علیہ
حضرت امام جابر مغربی رضی اللہ تعالیٰ علیہ
حضرت امام ابراہیم کرمانی علیہ رحمتہ اللہ علیہ
حضرت امام اسمعیل بن شوکت رحمتہ اللہ علیہ
تعبیر بیان کرنے کیلئے ضروری علوم
۔علم تفسیرعلم ضرب الامثالعلم حدیثاشعار عربعلم اشتقاق (صرف)نوادرعلم الغاتعلم الفاظ متد اَولہچنانچہ ایسے علماء ہے تعبیر بیان کرنے کے اہل ہیں جو ان علوم کے ماہر اور متقی پرہیزگار ہوں ۔
الوسوم

اترك تعليقاً

لن يتم نشر عنوان بريدك الإلكتروني. الحقول الإلزامية مشار إليها بـ *

زر الذهاب إلى الأعلى
إغلاق